bodrum escort escort bodrum yalıkavak
Home / Latest News / وزیراعظم آزاد کشمیر کا ریلوے ہیڈ کوارٹر کا دورہ

وزیراعظم آزاد کشمیر کا ریلوے ہیڈ کوارٹر کا دورہ

وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان نے وفاقی وزیر ریلویز اور مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما خواجہ سعد رفیق سے ریلوے ہیڈکوارٹرز لاہور میں ملاقات کی، ڈیڑھ گھنٹہ سے زائد جاری رہنے والی ملاقات میں ملکی سیاسی صورتحال، آزاد کشمیر کو ریل نیٹ ورک سے منسلک کرنے، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم اورباہمی دلچسپی کے دیگر امور پر تبادلہ خیال ہوا۔ ملاقات میں دونوں رہنماو ں نے اتفاق کیا کہ ایک مضبوط پاکستان ہی کشمیر کی آزادی کی ضمانت ہے، پاکستان کی سلامتی، خوشحالی اور ترقی آئین کی بالادستی اور جمہوریت کے تسلسل میں مضمر ہے۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ پارلیمنٹ ، مدر آ ف دی انسٹی ٹیوشنز‘ ہے، تمام اداروں کی ماں کی حیثیت رکھنے والے ادارے کو اس کا جائز مقام، مرتبہ اور عزت ملنی چاہئے اور اس سلسلے میں جہاں سیاستدانوں پر بھاری ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ قوم کو درپیش مسائل کے حل کے لئے غیر معمولی کارکردگی کا مظاہرہ کریں وہاں سیاستدانوں کے ایک مخصوص طبقے کو جمہوریت اور پارلیمنٹ کے خلاف مہرہ بننے سے تائب ہوناہوگا۔
وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان نے کہا کہ کشمیریوں کی پاکستان سے محبت اوروابستگی لازوال اور بے مثال ہے، آزاد کشمیر کو ریل نیٹ ورک سے منسلک کرنا کشمیری عوام کی خواہش اور وقت کی اہم ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ریلوے ایک دم توڑتا ہوا ادارہ تھا جسے اس دور میں زندہ کر دیا گیا ہے اور اب کوئی ریلوے کی نیلامی اور نجکاری کی بات نہیں کرتا، کامیابی کے اس ماڈل کو دوسرے شعبوں میں بھی لانا ہوگا۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ میاں نواز شریف نے بطور وزیراعظم مظفر آباد کو ریل نیٹ ورک کے ساتھ منسلک کرنے کے لئے منصوبہ بندی کی ہدایت کی تھی، ان کی ہدایات کی روشنی میں پاکستان ریلویز نے ایک جامع سٹڈی مکمل کر کے اس کی رپورٹ وفاقی حکومت کو پیش کر دی ہے۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ ہمارے فیوچر وژن میں آزاد کشمیر میں ریلوے نیٹ ورک کا قیام اتنا ہی اہم ہے جتنا اہم ہمارے لئے پاکستان میں ریلوے کی بحالی ہے۔ ہم ریل نیٹ ور ک کے ذریعے پاکستان اور کشمیر کے درمیان رابطوں کو مزید مستحکم بنا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی حکومت اس سلسلے میں اپنے کشمیری بھائیوں کو مایوس نہیں کرے گی، فنڈز کا انتظام ہوتے ہی آزاد کشمیر کو ریلوے نیٹ ورک سے ملانے کے لئے گراونڈ پر کام شروع کر دیا جائے گا۔
ملاقات میں بھارت کی طرف سے مقبوضہ کشمیر میں جاری مظالم کی شدید مذمت کی گئی اور اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا گیا کہ کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جائے، دونوں رہنماوں کا کہنا تھا کہ بین الاقوامی برادری اورتنظیموں کی طرف سے مسئلہ کشمیر پر غیر جانبداری ، ظالم اور قابض بھارت کی طرفداری کے مترادف ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں ہزاروں گمنام قبریں بھارتی افواج کے انسانیت سوز مظالم کی گواہی ہیں اور سوال کرتی ہیں کہ عالمی ضمیر کب تک سویا رہے گا۔ ملاقات میں میانمار کے مسلمانوں پر بدھ مت کے پیروکاروں کی طرف سے مظالم کی بھی مذمت کی گئی اور کہا گیا کہ کشمیر ہو یا برما، انسانی حقوق کی خلاف ورزی قابل مذمت عمل ہے۔ملاقات میں آزاد کشمیر کے وزیر ٹرانسپورٹ ناصر حسین ڈار، ممبر کشمیر کونسل خالد وصی،ملک ذوالفقارڈائریکٹر جنرل پولیٹیکل ٹو پرائم منسٹر آزاد کشمیر، رکن قومی اسمبلی ملک ریاض بھی موجود تھے۔

About Waseem Ahmad

Share your Comments

comments