عدالت میں دوران سماعت ایک شخص نے مریم نواز کی ویڈیو بنانا شروع کردی لیکن پھر جج نے اس شخص کو کیا سزا دی ؟

ہائی کورٹ میں مسلم لیگ ن کی نائب صدر اور سابق وزیر اعظم کی صاحبزادی مریم نواز کی ویڈیو بنانے والے شخص کا موبائل فون ضبط کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے جج جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی نے ایون فیلڈ ریفرنس میں مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی اپیلوں پر سماعت کی۔ دوران سماعت ایک شخص نے اپنے موبائل فون پر مریم نواز ویڈیو بنانا شروع کر دی جس پر فوری ایکشن لیتے ہوئے کورٹ اسٹاف کی جانب سے اس شخص کا موبائل ضبط کر لیا گیا۔عدالت نے لاہور سے آئے ہوئے مذکورہ شخص کو 5 ہزار روپے جرمانہ ایدھی سینٹر میں جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ جرمانہ جمع کرانے کی رسید دکھا کر کورٹ اسٹاف سے موبائل فون لے لیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں